Danishkadah Danishkadah Danishkadah
حضرت امام محمد باقر نے فرمایا، مومن پہاڑ سے زیادہ مضبوط ہوتا ہے، کیونکہ پہاڑ کو کاٹا جاسکتا ہے،مگر مومن کے دین کو نہیں توڑاجاسکتا۔ اصول کافی باب المومن و علاماتہ حدیث37

نہج البلاغہ خطبات

ذعلب یمنی نے آپ سے سوال کیا کہ یا امیر المومنین[ع] کیاآپ نے اپنے پروردگار کو دیکھا ہے ؟تو آپ نے فرمایا کیا میں اس اللہ کی عبادت کرتا ہوں ؟ جسے میں نے دیکھا تک نہیں ۔اس نے کہا کہ آپ کیونکر دیکھتے ہیں ؟ تو آپ نے ارشاد فرمایا کہ:

آنکھیں اسے کھلم کھلا نہیں دیکھتیں بلکہ دل ایمانی حقیقتوں سے اسے پہچانتے ہیں ۔وہ ہر چیز سے قریب ہے ۔لیکن جسمانی اتصال کے طور پر نہیں ۔و ہ ہر شے ء سے دور ہے ۔مگر الگ نہیں وہ غور و فکر کئے بغیر کلام کرنے والا اور بغیر اعضا ء (کی مدد)بنانے والا ہے ۔وہ لطیف ہے لیکن پوشیدگی سے اسے متصف نہیں کیا جاسکتا ۔وہ بزرگ و برترہے مگر تند خوئی اور بدخلقی کی صفت اس میں نہیں ۔وہ دیکھنے والا ہے مگر حواس سے اسے موصو ف نہیں کیا جاسکتا ۔وہ رحم کرنے والا ہے مگر اس صفت کو نرم دلی سے تعبیر نہیں کیا جاسکتا ۔چہرے اس کی عظمت کے آگے ذلیل و خوار اور دل ا س کے خوف سے لرزاں و ہراساں ہیں ۔

خطبہ 177: جب ذعلب یمانی نے آپ  سے یہ سوال کیا کہ آپ نے خدا کو دیکھا ہے تو اس کے جواب میں فرمایا