Danishkadah Danishkadah Danishkadah
حضرت امام جعفر صادق نے فرمایا، مومن کو مومن اس لئے بھی کہتے ہیں کہ وہ اپنے ایمان کو امانت کے طور پر اللہ کے سپرد کردیتا ہےاور خدا اس امانت کو قبول فرماتا ہے۔ وسائل الشیعۃ حدیث 16170، الامالی للطوسی ؒ مجلس2

نہج البلاغہ خطبات

جو شخص غیر مستحق کے ساتھ حسن سلوک برتتا ہے ۔ تا اہلوں کے ساتھ احسان کرتا ہے ، اس کے پلے یہی پڑتا ہے کہ کمینے اور شریر اس کی مدح و ثنا کرنے لگتے ہیں اور جب تک وہ دیتا دلاتا رہے جاہل کہتے رہتے ہیں کہ اس کا ہاتھ کتنا سخی ہے ۔ حالانکہ اللہ کے معاملہ میں وہ بخل کرتا ہے چاہیئے یہ کہ اللہ نے جسے مال دیا ہے وہ اس سے عزیزوں کے ساتھ اچھا سلوک کرے ۔ خوش اسلوبی سے مہمان نوازی کرے ۔ قیدیوں اور خستہ حال اسیروں کو آزاد کرائے محتاجوں اور قرضداروں کو دے اور ثواب کی خواہش میں حقو ق کی ادائیگی اور مختلف زحمتوں کو اپنے نفس برداشت کرے اس لیے کہ ان خصائل و عادات سے آراستہ ہونا دنیا کی بزرگیوں سے شرفیاب ہونا اور آخرت کی فضیلتوں کو پا لینا ہے، انشاء اللہ

خطبہ 140: بے محل داد و دہش سے ممانعت اور مال کا صحیح مصرف