نمازمیں حجاب (پردہ )

سوال ۳۶ : نماز میں کامل پردے کا کیا فلسفہ ہے؟ خدا تو سب کا محرم ہے ، تا ریکی میں اور تنہائی میں تو کوئی نامحرم نہیں ہے، تو پھر عورتوں پر مکمل پردے کے ساتھ نماز کی پابندی کیوں؟
ایک:نماز کے بہت سے آثار و فوائد ہیں ان میں سے ایک اقدار کو طبیعت میں ثابت کرنا اورطہارت و پاکی کی مسلسل تمرین کرنا ہے ، خدا کی یاد سب سے بڑی ارزش و عظمت ہے اور پنجگانہ نمازیں اس عظمت کو سب کے دلوں میں ثابت کرتی ہیں ،مکمل اسلامی پردے کی حفاظت بھی عورتوں کیلئے بہت قرارمنزلت کی حامل ہے ،خداوند عالم نے اس عظمت کی مسلسل یاد دہانی کیلئے اسے عورتوںپر نماز میں واجب فرمایا ہے تا کہ ہمیشہ اس کی حفاظت پر ثابت قدم رہیں۔
دو: پورے بدن کو ایک کپڑے کے ساتھ ڈھانپ لینا اور مخصوص پردے کے ساتھ نماز پڑھنا انسان کی توجہ اور حضور قلب کو زیادہ کرتا ہے ، مختلف خیالات کو کم کرتا ہے اور نماز کی عظمت کو صد برابر زیادہ کرتا ہے۔
تین:پورے پردے کے ساتھ نما پڑھنا خدا کے سامنے ایک طرح کا ادب ہے اسی وجہ سے مرد پر بھی نماز میں عبا ء لینا اور سر ڈ ھا نپنا مستحب ہے ، یہ بارگا ہ خدا وند میں ظاھر ی ادب اور اس کی معنوی قربت کا باعث بنتی ہے ۔
چار:نماز کا پردہ اور نا محرم کے مقا بل پردہ آ پس میں کئی جہت سے فرق رکھتے ہیں اور اسے اس کے ساتھ قیاس نہیں کیا جا سکتا مثلاًپا ؤں کا اوپر والاحصّہ نا محرم کے سا منے ڈ ھا نپنا واجب ہے لیکن نماز میں(نامحرم کی عدم موجودگی میں) واجب نہیں ہے۔