طلاق اور ماہانہ عادت

٭سوال۲۴۵:۔ کیا ماہانہ کی عادت کے ایام میں عورت کو طلاق دینا صحیح ہے؟
تمام مراجع: نہیں، ایامِ عادت میں عورت کو طلاق دینا صحیح نہیں ہے، مگر درج موارد ذیل میں:
۱۔ اسکے شوہر نے ازدواج کے بعد اس کے ساتھ ہمبستری نہ کی ہو۔
۲۔ عورت حاملہ ہو۔
۳۔ مرد دور و غائب ہونے وغیرہ کے سبب نہ سمجھ پا ئے کہ عورت خون ِ حیض سے پاک ہے
یا نہیں۔ (ا)
وضاحت: آیت اللہ سیستانی تیسرے مورد کے بارے میں فرماتے ہیں کہ بنا بر احتیاط واجب مرد کو
چاہیے کہ کم از کم ایک ماہ صبر کرے اور اسکے بعد طلاق دے۔
(حوالہ)
(۱)توضیح المسائل مراجع،م۲۵۰۰،وحید، توضیح المسائل ،م۲۵۶۴